Author: Hafiz Mughal

جس چیز کو ہم جانتے ہیں اور جن جذبات و احساسات سے ہم واقف ہیں اس کا نام شعور ہے اور جن خیالات کو نہیں جانتے ان کا نام لاشعور ہے۔ یہ جاننا اور نہ جاننا دونوں انسان کے اندر موجود ہیں۔ ان طرزوں کو جو ہماری سمجھ میں ابھی تک نہیں آ سکی ہیں”لا’’ کہا جاتا ہے۔ لا کی طرزوں میں داخل ہونے کے لئے اور لا کی طرزوں سے متعارف ہونے کے لئے ہمیں الا کی نفی کرنی پڑتی ہے۔ مادی دنیا میں زمان و مکاں کی جس زندگی سے ہم واقف ہیں اور جو زندگی ہمارے اوپر…

Learn More

جب بھی کسی علم کا تذکرہ ہوتا ہے دو باتیں لازماً درپیش آتی ہیں ۔ علم کا منفی پہلو اور علم کا مثبت پہلو۔ جب ہم انکار کرتے ہیں تو دراصل ہم کسی”ہے’’کی نفی کرتے ہیں۔ یعنی کوئی چیز موجود ہے اگر کوئی چیز موجود نہ ہو تو اس کا تذکرہ ہی نہیں ہو گا۔ ہم جب علم کے بارے میں کچھ کہتے ہیں تو علم کے بارے میں ہمارے ذہن میں معانی ہوتے ہیں۔ اور جب ہم انکار کرتے ہیں تو نفی کو قبول کرتے ہیں۔ یعنی ہم ایسی چیز کا تذکرہ کرتے ہیں جس کے ہونے کا ہم…

Learn More

ساری کائنات اور کائنات کے اندر تمام نوعیں اور افراد ایک مرکزیت کے ساتھ بندھے ہوئے ہیں۔ مختلف مراحل اور زندگی کے مختلف زمانے ظاہری نظروں سے الگ الگ نظر آتے ہیں لیکن زمانے کے نشیب و فراز اور زندگی کے مراحل میں تغیر و تبدل کتنا ہی کیوں نہ ہو سب کا تعلق مرکزیت سے ہے۔ مرکزیت کے درمیان لہریں یا شعاعیں واسطہ ہیں۔ ایک طرف مرکزیت سے لہریں یا شعاعیں نزول کر کے افراد کائنات کو فیڈ کرتی ہیں اور دوسری طرف فرد کے اندر نزول ہونے کے بعد صعود کرتی ہیں۔ نزول و صعود کا یہ سلسلہ…

Learn More

روحانی علوم کی تقسیم تین باب پر مشتمل ہے۔ ایک باب انفرادی زندگی کے اعمال و حرکات اور زندگی کی ساخت اور تخلیقی فارمولوں کے اوپر مشتمل ہے۔ دوسرا باب نوعی تخلیقی فارمولوں پر مشتمل ہے اور تیسرا باب خالق کی مشیئت سے متعلق ہے۔ انسان یا کائنات میں موجود کوئی بھی نوع یا کسی بھی نوع کا کوئی فر دزندگی گزارنے کے لئے دو رخوں کا محتاج ہے۔ ایک رُخ کو ہم بیداری اور دوسرے رُخ کو خواب کہتے ہیں۔ بیداری اور خواب دونوں کا تذکرہ قرآن پاک میں لیل اور نہار کے نام سے کیا گیا ہے۔ قرآن…

Learn More

اسلامی تشہیر کے مطابق، اللہ تعالیٰ کا علم حد سے زیادہ ہے اور انہوں نے کائنات کو بنانے سے پہلے ہی اس کے بارے میں مکمل علم رکھتے ہیں۔ ان کی مخلوقات کو وجود میں لانے کے لیے صرف ان کی مرضی کا اظہار کافی ہے، جس کا ذکر قرآن مجید میں بار بار کیا گیا ہے جیسا کہ آپ نے بھی ذکر کیا۔ اللہ تعالیٰ کی قدرت کا اظہار کائنات کی تشہیر کے ذریعے ہوتا ہے، جو کہ قرآن مجید میں بھی مکمل طور پر ذکر ہوتا ہے۔ اسلامی تعلیمات میں کائنات کو ایک اسلامی بات چیت کے طور…

Learn More

کائنات میں موجود تمام اشیاء خواہ وہ جزولاتجزاء کی حیثیت رکھتی ہوں۔۔۔۔۔۔ان کی حیثیت روحانی ہو یا وہ خارجی حالات میں شکل و صورت میں ظاہر ہوں۔ سب اللہ تعالیٰ کے ارادے کا عکس ہے۔ یعنی ساری کائنات اللہ تعالیٰ کے ارادے کی شکل و صورت ہے۔ اللہ تعالیٰ کے ذہن میں کائنات اور کائنات کے اندر موجودات کی تصویر اور ان تصویروں کی ضروریات جس طرح موجود تھیں وہ اللہ تعالیٰ کے ارادے کے ساتھ تخلیق ہو گئیں۔ تخلیق کے دو رُخ ہیں۔ ایک رُخ ظاہری شکل و صورت اور ایک رُخ وہ جس نے اس ظاہری شکل و…

Learn More

“روح” ایک مفہومی اور فلسفی مسئلہ ہے جس پر مختلف مذاہب، فلسفیہ، اور علمی ترقی کے متعلقہ میدانوں میں مختلف نظریات موجود ہیں۔ اسلامی تصور میں، روح انسان کا ایک مہم جزو ہے جو اللہ کی طرف سے انسان میں دی گئی ہے۔ اس کا انسانی جسم سے مختلف ہوتا ہے اور اس کی زندگی اور فکرت کو اختیار کرتا ہے۔ علمی حوالے سے، روح کا تفسیر مختلف ہوتا ہے۔ کچھ لوگ روح کو غیر مادی اور غیر محسوس انجانے چیزوں کا مجموعہ تصور کرتے ہیں جو انسانی وجود کو زندہ رکھتا ہے۔ دوسرے علمی نظریات مانتی ہیں کہ روح…

Learn More

پچھلے لیکچرز میں اس بات کی وضاحت کی گئی ہے کہ انسان کے اندر زندگی سے متعلق خواہ وہ زندگی زمان اور مکان میں پابند زندگی ہو یا ٹائم اینڈ اسپیس سے آزاد زندگی ہو، خیالات کے اوپر قائم ہے اور ہر خیال علم کی حیثیت رکھتا ہے۔ اس بات کو سمجھنے کے لئے فلم کی مثال کافی حد تک وضاحت کرتی ہے۔ پروجیکٹر سے لہریں چلتی ہیں جو محسوس بھی ہوتی ہیں اور نظر بھی آتی ہیں لیکن ان لہروں کے بارے میں ہمارے ذہن میں کوئی معنی پیدا نہیں ہوتے۔ سینما میں بیٹھے ہوئے ہم یہ دیکھ رہے…

Learn More

بچوں کی تربیت میں مسجد کا کردار ایک مسجد میں عصر کی نماز سے فارغ ہوا تو موذن صاحب نے اعلان کیا :کہ “بچوں کو سنبھالیں ورنہ ان کو ہم سنبھالیں گے پھر بعد میں کوئی شکایت نہ کرے” !!! اس طرح کے واقعات اکثر مغربی یوپی کی مختلف مساجد میں دیکھنے کو ملتے ہیں، بلکہ عملاً بچوں کے ساتھ ہم لوگوں کا سلوک غیر اسلامی اور اخلاقی ہوتا ہے اس کی عزت نفس کو ٹھیس پہونچاءی جاتی ہے عموماً مساجد کی کمیٹی یا ذمہ داران مساجد کے سامنے بچوں کی تربیت کا نہ کوئی منصوبہ ہوتا ہے اور نہ…

Learn More

**مسجد میں بچوں کی کنٹرول کرنے کے طریقے** شریعتِ  مطہرہ  کا حسن  ہے کہ اس نے فوائد  کی بھی  رعایت  رکھی ہے اور نقصانات  سے  بچنے کابھی اہتما م کیا ہے،  شریعت کی تعلیمات افراط وتفریط  کے درمیان اعتدال پر مبنی  ہیں، بچوں کو مسجد میں لانے یا نہ لانے  سے متعلق بھی احکاماتِ  شرعیہ اعتدال پر مبنی ہیں، مطلقًا ہر قسم کے بچوں کو لانا جائز ہے ، نہ ہی  ہر قسم کے بچوں کو لانا منع ہے۔ بچوں کو مسجد میں لانے میں جہاں یہ اندیشہ ہے کہ مسجد میں شوروشغب ہوگا ،عبادات کاماحول متاثر ہوگا اوراپنی کم عمری…

Learn More